فیس بک نے صارفین کے لیے پاڈ کاسٹ اور براہ راست آڈیو اسٹریمز کا آغاز کر دیا

فیس بک نےصارفین کو اپنے پلیٹ فارم پر مصروف رکھنے کےلیے پیر21 جون سے پاڈ کاسٹ اور براہ راست آڈیو اسٹریمز کا آغاز کررہا ہے۔ فی الحال یہ فیچر صرف امریکا میں صارفین کےلیے دستیاب ہوگا۔ وائس آف امریکا کی رپورٹ کے مطابق فیس بک اس وقت صرف امریکا میں عوامی شخصیات اور فیس بک کے کچھ گروپس کو یہ براہ راست آڈیو پلٹ فارم استعمال کرنے کی اجازت دے گا ، تاہم آئی او ایس اور اینڈرائڈ کے صارفین ان آڈیورومز میں سننے والے کی حیثیت سے حصہ لے سکتے ہیں۔ فیس بک کا کہنا ہے کہ وہ تصدیق شدہ اکاؤنٹس والے عوامی شخصیات کو براہ راست آڈیو رومز شروع کرنے کی اجازت دے رہا ہے جبکہ یہ اکاؤنٹ ہولڈرز دوسروں کو مہمان کی حیثیت سے بولنے کےلیے مدعو کرسکتے ہیں۔ اس سلسلے میں فیس بک مختلف موسیقاروں ، صحافیوں اور ایتھلیٹوں سمیت عوامی شخصیات کے ساتھ شراکت کررہی ہے۔ اس کے علاوہ براہ راست آڈیو روم کے میزبان اپنی گفتگو کے دوران فنڈ جمع کرنے والے اداروں کا انتخاب بھی کرسکیں گے۔ فیس بک انتظامیہ کا کہنا ہے کہ یہ فیچر دیکھنے میں بظاہر کلب ہاؤس اور ٹویٹر اسپیسز سے ملتا جلتا ہے جس میں اوپر میزبانوں کی پروفائل تصاویر ہیں اور پھر سامعین اس کے نیچے نظر آتے ہیں۔ ایک آڈیوروم 50 مقررین تک محدود ہوگا جبکہ سننے والوں کی تعداد کی کوئی حد نہیں۔ ایسوسی ایٹڈ پریس کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ فیس بک کے سی ای او مارک زکربرگ نے گزشتہ ہفتے اپنے فیس بک پیج پر اپنا براہ راست آڈیو روم بنایا تھا۔ مارک زکر برگ ماضی میں آڈیو اسٹریمنگ ایپ کلب ہاؤس میں بھی شرکت کرچکے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں