مہنگائی کی نئی لہر آنے کو تیار،بجلی1روپے68پیسے مہنگی،پٹرول بھی مہنگا کرنے کی تیاری

اسلام آباد(نیوزٹویو) عوام ملک میں مہنگائی کی ایک نئی لہرکے لیے تیا ر ہوں جا ئیں وفاقی کا بینہ نے بجلی 1روپے68پیسے فی یونٹ بجلی مہنگی کرنے کی منظوری دے دی ہےعوام کا بھرکس نکالنے کے لیے وفاقی حکومت کی جانب سے بجلی کی قیمت میں 1 روپے 68 پیسے فی یونٹ اضافہ کے بعد پٹرول کا بم بھی گرنے کو تیار ہے  بجلی قیمتوں میں ا ضا فے کا اطلا ق کے الیکٹرک کے صارفین اور 200یو نٹ تک بجلی ا ستعمال کرنے والوں پر نہیں ہو گا وفاقی کابینہ نے دی ہے۔ذرائع کےمطابق بجلی کی قیمت میں اضافہ سہہ ماہی ٹیرف ایڈجسٹمنٹ کی مد میں کیا گیا کابینہ نے سرکولیشن سمری کے ذریعے بجلی مہنگی کرنے کی منظوری دی ہے۔ نیپرا نے سہ ماہی ٹیرف ایڈجسٹمنٹ کی مد میں بجلی مہنگی کرنے کا فیصلہ کیا تھا، نیا سہ ماہی ٹیرف ایڈجسٹمنٹ میں اضافہ یکم اکتوبر سے لاگو ہوگا۔ ذرائع نے بتایا کہ بجلی کی قیمتوں میں اضافے کی سمری وزارت توانائی کی جانب سے بھجوائی گئی تھی۔

دوسری جانب وفاقی حکومت پٹرولیم مصنوعات بھی مہنگی کرنے کی تیاری کر رہی ہے اوگرا نے قیمتوں میں اضافے کی سمری ارسال کر دی ہے جس میں پٹرولیم مصنوعات 10 روپے فی لٹرمہنگی کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔واضح رہے بجلی اور پٹرولیم  مصنوعات مہنگی ہونے سے دیگر تمام اشیا کی قیمتیں بھی از خود بڑھ جاتی ہیں، حکومت اربوں روپے کا بوجھ پہلے ہی مہنگائی سے پسی عوام پر منتقل کر رہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں