صدرعارف علوی کو چیئرمین نیب نے سالا نہ رپورٹ پیش کر دی،2020میں 323ارب بازیاب کرا ئے،136ریفرنس دائرکیے،

اسلام آباد ( نیوزڈیسک )قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین جاوید اقبال نے صدر ڈاکٹر عارف علوی کو نیب کی سالانہ رپورٹ 2020 پیش کر دی ہے۔رپورٹ کے مطابق نیب کوسال 2020ء میں  24،706 شکایات موصول ہوئی گذشتہ سال کی شکایات سمیت کل  30،405 شکایات نمٹا ئی گئیں 878 شکایات کی توثیق پر کارروائی ہو ئی 369 انکوائریز کی گئی گذشتہ سال احتساب عدالتوں کے سامنے 136 ریفرنسز دائر کیے چیئرمین نیب نے انہیں اپنی تنظیم کی کارکردگی سے آگاہ کیاصدر مملکت نے سال 2020ء میں 323 ارب روپے کی ریکوری پر نیب کی تعریف کی ہے اوربدعنوان عناصر کے خلاف کاروائی کرنے پر نیب کے کردار کو سراہا جمعہ کوصدر مملکت عارف علوی سے چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید ا قبال نے ملاقات کی انہوں نے صدر کو آگاہ کیا کہ سال 2020 کے دوران استغاثہ کا مجموعی کامیابی کا تناسب 66 فیصد رہا۔جاوید اقبال سے گفتگو کرتے ہوئے صدر عارف علوی نے معاشرے سے بدعنوانی کے لعنت کو ختم کرنے اور حکمرانی کے نظام میں شفافیت اور احتساب کو فروغ دینے کے لئے مزید مؤثر اقدامات پر زور دیا۔ُنہوں نے کہا کہ بدعنوانی قوم کو درپیش ایک بہت بڑا چیلنج ہے اور معاشرے کے تمام طبقات کی اجتماعی ذمہ داری ہے کہ وہ کرپٹ طریقوں کی حوصلہ شکنی کریں اور ملک سے بدعنوانی کے خاتمے کے لئے حکومت کی کوششوں کی حمایت کریں نیب کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے صدر نے کہا کہ تنظیم نے کرپٹ عناصر کے خلاف جنگ لڑکرایک عظیم کام کیا ہے۔ُنہوں نے بدعنوانی سے پاک پاکستان کے وژن کی تکمیل کے لئے بورڈ کے احتساب کو یقینی بنانے کی مزید کوششوں کی ضرورت پر زور دیا۔ اُنہوں نے معاشرے سے بدعنوانی کے خاتمے کے لئے نیب کے چیئرمین کو تنظیم کو مضبوط بنانے میں اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں