حکومت کا عوام پرپٹرول بم، پٹرول 2 روپے ڈیزل1روپے44پیسے مہنگا،مٹی کاتیل اور لا ئٹ ڈیزل کی قیمت میں بھی ا ضافہ

اسلام آباد (نیوزٹویو) بجٹ پاس ہوتے ہی وفاقی حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ایک مرتبہ پھر اضافے کر کے عوام پر پٹرول بم گرا دیا ہے پٹرول کی قمیت میں 2روپے فی لیڑ جبکہ ڈیزل کی قیمت میں ایک 1روپے 44پیسےکااضا فہ کر دیا گیا ہےوزارت خزانہ نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ا ضا فے کا نو ٹیفیکیشن جا ری کردیا ہے جبکہ وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ میں کہا ہے کہ عالمی مارکیٹ میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی وجہ سے اوگرا نے 6 روپے 5 پیسے فی لیٹر پیٹرول کی قیمت میں اضافہ تجویز کیا تھا لیکن وزیراعظم نے صرف 2 روپے فی لیٹر اضافے کی اجازت دی ہے۔ اپنے ٹویٹ میں انہوں نے لکھا کہ اوگرا کی طرف سے ڈیزل فی لیٹر3 روپے 44پیسے اضافے کی تجویز دی گئی تھی لیکن صرف ایک روپے 44 پیسے اضافے کی اجازت دی گئی ہے۔نئی قیمتوں کا اطلاق آج رات بارہ بجے سے ہو گا حکومت کی جانب سے نئی قیمتوں کے مطابق پٹرول اب 112 روپے 69 پیسے فی لٹر میں فروخت ہوگا۔ اس کے علاوہ ہائی سپیڈ ڈیزل کی قیمت 1 روپیہ 44 پیسے فی لٹر بڑھا دی گئی ہے ہا ئی سپیڈ ڈیزل کی نئی قیمت 113روپے 99پیسے فی لیڑہو گئ ہے۔ لائٹ ڈیزل 2 روپے 03 پیسے مہنگا کیا گیا ہے اب اس کی نئی قیمت 83 روپے 40 پیسے ہوگی۔

قیمتوں میں اضافے کے بعد ہائی سپیڈ ڈیزل کی نئی قیمت 112 روپے 69 پیسے فی لٹر مقرر ہو گی۔ مٹی کا تیل ایک روپیہ 89 پیسے فی لٹر مہنگا کرتے ہوئے اس کی قیمت 85 روپے 75 پیسے فی لٹر کر دی گئی ہے۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں