سابق وزیراعظم کی جائداد نیلامی کے فیصلہ کے خلاف تین دعویداروں کی درخواستوں پر سماعت ملتوی

اسلام آباد(نمائندہ نیوز ٹویو)اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہرمن اللہ کی عدالت میں زیر سماعت توشہ خانہ ریفرنس میں سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی جائیداد نیلامی فیصلہ کے خلاف تین دعویداروں کی درخواستوں پر سماعت ملتوی کردی گئی۔گذشتہ روز سماعت کے دوران چیف جسٹس کی عدم دستیابی کے باعث سماعت بغیر کاروائی ملتوی کردی گئی۔یاد رہے کہ میاں اقبال برکت، اسلم عزیز اور اشرف ملک کی طرف سے دائردرخواستوں میں اپر مال لاہور  کا گھر، رائیوانڈ کی ایک سو پانچ ایکڑ اراضی کی ضبطگی سے روکنے،شیخوپورہ کی 88 کنال ارضی کی ضبطگی کا احتساب عدالت کا حکم بھی کالعدم قرار دینے کی استدعاکرتے ہوئے کہاگیاہے کہ احتساب عدالت نے فیصلہ دیتے وقت حقائق کو نظر انداز کیا،یکم اکتوبر 2020،  اپریل 2021 اور جون دوہزار اکیس کا احتساب عدالت کا فیصلہ کالعدم قرار نہ دیا گیا تو درخواست گزار اثر انداز ہونگے، احتساب عدالت کے فیصلے سے درخواست گزاروں کو ناقابل تلافی نقصان کا اندیشہ ہے، عدالت یکم اکتوبر 2020،  اپریل 2021 اور جون دوہزار اکیس کے احتساب عدالت کے فیصلے کالعدم قرار دے۔واضع رہے کہ احتساب عدالت اسلام آباد نے تینوں درخواست گزاروں کے اعتراضات پر مبنی درخواست مسترد کردی تھی،توشہ خانہ ریفرنس میں احتساب عدالت نے یہ اراضی بحق سرکار ضبط کرنے کا حکم سنا رکھا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں