سندھ میں گیس کا بحران شدت اختیار کر گیا،سی این جی ‏اسٹیشنز غیر معینہ مدت کے لیئے بند

گیس پیدا کرنے والے صوبے میں گیس کا بحران شدت اختیار کر گیا۔ سندھ میں سی این جی ‏اسٹیشنز کو غیر معینہ مدت کے لیئے بند کردیا گیا۔ ‏ایس ایس جی سی کے مطابق سی این جی اسٹیشنز کی بندش کا فیصلہ وفاقی حکومت کے حکم پر ‏کیا گیا ہے۔ ‏آل پاکستان پیٹرولیم ریٹلرز ایسوسی ایشن ممبر سمیر نجمل حسین کا کہنا ہے کہ منگل 22 جون ‏سے غیر معینہ مدت تک کلوژر کا نوٹیفیکیشن موصول ہوا ہے سندھ کی عوام اور سی این جی ‏اسٹیشن مالکان کے ساتھ زیادتی بند کی جائے۔سمیر نجمل حسین نے کہا کہ ہمیں ‏RLNG‏ پر دباؤ ڈال کر اور ہماری انڈسٹری کے کچھ لوگوں کو ‏ملا کر جبری منتقل کیا گیا وعدہ یہ تھا کہ ‏RLNG‏ پر لوڈشیڈنگ نہیں ہو گی۔ لیکن 1 سال گزرنے ‏کے باوجود کوئی بہتری نہیں۔ ‏انہوں نے کہا کہ کیپٹیو پاور جس پر وفاق نے پابندی لگائی ہے کو بلا تعطل گیس کی فراہمی جاری ‏ہے ایس ایس جی سی کے پورے نیٹورک جو کے 1250 ایم ایم سی ایف ڈی ہے میں سے سی این ‏جی صرف 32 ایم ایم سی ایف ڈی لے رہی ہےاتنی کم کھپت کے باوجود سب سے پہلے سی این ‏جی کو بند کیا جاتا ہے۔ ‏

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں