واہ ری سیاست،دو دشمن پی ٹی آئی اور جےیوآئی آزاد کشمیرالیکشن میں ایک ہو گئے

اسلام آباد (نیوزٹویو) آزاد کشمیر الیکشن  کے حوالے سےسیاسی جوڑ توڑ عروج پر پہنچ گیا پا کستان کی سیاست میں ایک دوسرے کی سخت ترین مخالف دو جماعتوں پا کستان تحریک ا نصاف اور جمعیت علما ئے اسلام نےسیاسی مفادات کے تحت آزاد کشیمرکا الیکشن مل کر لڑنےکا فیصلہ کیا ہے تحریک ا نصاف کواہم شخصیات کی تحریک انصاف میں شمولیت کیساتھ مختلف سیاسی جماعتوں کی غیرمشروط حمایت بھی ملنا شروع ہو گئی ہےسیاسی جماعتوں میں جمعیت علمائے جموں کشمیر اور آل جموں کشمیر جمعیت علمائے اسلام شامل ہیں جبکہ دو سابق وزرا نے بھی تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کر لی ہے۔ ان سابق وزرا میں سید منظوراور مفتی منصور پی ٹی آئی میں شامل ہو ئے ہیں۔ ان کا تعلق مسلم لیگ (ن) اور مسلم کانفرنس سے ہے۔ اتوار کومعاون خصوصی وزیر اعلیٰ پنجاب سردار تنویر الیاس سے آل جموں کشمیر جمعیت علماء اسلام کے وفد نے ملاقات کی ملاقات میں وفد کی قیادت امیر جماعت قاضی محمود الحسن نے کی ملاقات کے نتیجے میں پی ٹی آئی اور آل جموں کشمیر جمیعت علماءاسلام کےدرمیان آئندہ الیکشن میں انتخابی اتحاد کا فیصلہ کیا گیا آل جموں کشمیر جمیعت علماءاسلام نے اپنے تمام امیدوار پی ٹی آئی امیدواروں کے حق میں بٹھانے کا اعلان کر دیاقاضی محمود الحسن اشرف نے کہا کہ آل جموں کشمیر جمعیت علماء اسلام تمام حلقوں میں پی ٹی آئی کو سپورٹ کرے گی دونوں جماعتوں کے اتحاد سے ریاست میں ساز گار ماحول پیدا ہوگاسردار تنویر الیاس نے کہا کہ آزاد کشمیر کی سیاست میں مذہبی جماعتوں کا ایک اہم کردار ہےجموں کشمیر جمعیت علماء اسلام کا ہر حلقے میں ووٹ بینک موجود ہےجموں کشمیر جمعیت علماء اسلام کے قائدین کا اتحاد کرنے پر شکر گزار ہوں جموں کشمیر جمعیت علماء اسلام کے ساتھ ملکر الیکشن لڑیں گےعمران خان نے دنیا میں اسلام کا مقدمہ بھرپور انداز میں لڑاعمران خان  اسلام فوبیا کیخلاف توانا آواز بن کر سامنے آئےعمران خان نے کشمیر اور اسلام کے معاملے پر کبھی سمجھوتہ نہیں کیا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں