ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی،الیکشن کمیشن کاانتخابی امیدواران اورسرکاری حکام کونوٹسزجاری

 اسلام آباد (نیوزٹویو)صوبائی اسمبلی حلقہ پی پی اڑتیس 38سیالکوٹ میں ضمنی انتخاب کے حوالے سے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر، الیکشن کمیشن نے متعلقہ انتخابی امیدواران اور سرکاری حکام کو خطوط و نوٹسز ارسال کئےہیں۔  ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر الیکشن کمیشن نے اسسٹنٹ کمشنر سیالکوٹ کو انتخابی ضابطہ اخلاق پر عملدرآمد کرانے کیلئے، انتخابی مہم کیلئے حلقے کی حدود میں آویزاں تمام بینرز اور پینا فلیکسز کو  فوری طور پر ہٹانے کیلئے احکامات جاری کر دئیے۔ ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے ہدایات جاری کر دیں کہ حلقے میں مختلف مقامات پر موجود انتخابی مہم کے بینرز اور پینا فلیکسزضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ہیں، جنہیں روزانہ کی بنیادوں پر ہٹانے کیلئے ٹیمیں تشکیل دی جائیں اور ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر کو رپورٹ پیش کی جائےڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے انتخابی امیدوار احسن سلیم کی طرف سے درج کروائی گئی شکایت پرچوہدری ارمغان سبحانی،ایم این اے حلقہ 72سیالکوٹ کو انتخابی امیدوار طارق سبحانی کی انتخابی مہم میں شرکت کرنے کے حوالے سے نوٹس جاری کر دیا۔ علاوہ ازیں ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے اس ضمن میں امیدوار طارق سبحانی کو بھی نوٹس جاری کیا۔ ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے چوہدری ارمغان سبحانی اور طارق سبحانی کو 13 جولائی کو وضاحت کیلئے پیش ہونے کے احکامات جاری کر دئے۔

                انتخابی امیدوار نجم الحسن نے ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر کے پاس ڈپٹی سیکرٹری، وزیر اعلیٰ پنجاب، گوجرانوالہ ڈیویژن، علی عباس کے خلاف درخواست جمع کروائی جس میں کہا گیا کہ مذکورہ افسر اپنے عہدے کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے حلقے کے ووٹرز کو ہراساں کر رہا ہے اور اپنی پسند کے امیدوار کو ووٹ دینے پر مجبور کر رہا ہے۔ ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے انتخابی امیدوار نجم الحسن کو جوابی خط میں ہدایات جاری کیں کہ قانون کے مطابق شکایت درج کرانے والے کو ثبوت بھی پیش کرنے ہوتے ہیں لہٰذہ ان الزامات کو ثابت کرنے کیلئے ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے انہیں 13جولائی کو بمعہ ثبوت پیش ہونے کی ہدایات جاری کر دیں۔ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ آفیسر نے انصر حسین،  ڈی جی جیپکو(جی ای پی سی او)گوجرانوالہ ڈیویژن، کو جونئیر انجنئیرز کے تبادلے و تقرری کے اعلامیے کوفوری طور پر منسوخ کرنے کے احکامات بھی جاری کر دئیے۔ تفصیلات کے مطابق انجنئیر فرقان احمد کو گجرات سے سیالکوٹ جبکہ انجنئیر محمد سلیم شاہد کو سیالکوٹ سے گجرات تعینات کیا جارہا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں