میں کشمیر کا نعرہ لگاتی ہوں تو رونگٹے کھڑے ہو جاتے ہیں، مریم نواز

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) مریم نواز نے کہا ہے کہ نواز شریف اور مسلم لیگ نون کا کوئی بھی وعدہ جھوٹا نہیں ہوتا۔ نوازشریف اپنا نقصان تو کرلیتا ہے لیکن عوام کو جھکنے نہیں دیتا۔آزاد کشمیر میں انتخابی مہم کے سلسلے میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا کہ جب میں نعرہ کشمیر کا نعرہ لگاتی ہوں تو رونگٹے کھڑےہوجاتےہیں کیوں کہ میری رگوں میں بھی کشمیر کا خون ہے۔مریم نواز نے کہا کہ نواز شریف کا نام سن کر ہی مخالفین کو کپکپی طاری ہوجاتی ہے۔ جعلی حکومت کے3 سال بعد بھی عمران خان کی صبح اور شام نوازشریف سےہوتی ہے۔ کابینہ اجلاس میں عوامی ایشوز کے بجائے نوازشریف کو روکنے کی منصوبہ بندی ہوتی ہے۔ نوازشریف کو اگر انسانی پلاننگ سے روکا جاتا تو نوازشریف کا آج نام لیوا بھی نہ ہوتا۔ اس وقت کشمیر کےچپےچپےپر نوازشریف کا نام لیوا ہے۔وزیراعظم نے تنقید کرتےہوئے مریم نواز نے کہا کہ عمران خان کوتیل کی قیمت بڑھنےسےاس لئےفرق نہیں پڑتا کیوں کہ عمران خان توسائیکل پرآفس جاتے ہیں۔عمران خان تو اس وزیراعظم آفس جاتے ہیں جس کو انھوں نے یونیورسٹی بنایا ہے۔عمران خان کےدور میں بجلی توآتی نہیں لیکن لمبے لمبے بل آتے ہیں۔ مقبوضہ کشمیرکامقدمہ ہارنے کے بعد اب عمران خان کی نظر آزاد کشمیر پر ہے۔معاشی صورتحال پر انھوں نے کہا کہ کل دسویں بار دوائیوں کی قیمت میں اضافہ ہوا ہے اور معیشت تباہ کرنے اور کاروبار ختم کرنے کے بعد اب دوائیاں چھیننےکی باری ہے۔عمران خان کا کچھ پتہ نہیں ہے۔ آزاد کشمیر کے پہاڑوں کو بھی آئی ایم ایف کو گروی رکھ دے گا۔انھوں نے یہ بھی کہا کہ جب تک دستخط شدہ رزلٹ ہاتھ میں نہ آجائے ووٹرز پولنگ اسٹیشن نہیں چھوڑیں گے۔ حکومت کو اب انتخابات میں شکست دکھائی دے رہی ہے تو الیکشن ریفارمز یاد آگئےہیں۔ الیکشن ریفارمز صرف عوام کی طاقت ہے۔مریم نواز نے کہا کہ کشمیر کو صوبہ بننے سے اگر کوئی روک سکتا ہے تو وہ نوازشریف ہے۔ 25جولائی کو مقبوضہ کشمیر کی آزادی اور آزاد کشمیرکی ترقی کا سورج طلوع ہوگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں