مسلم لیگ ن کے رہنماثنااللہ زہری اور عبدالقادربلوچ پیپلزپارٹی میں شامل،ملک اور بلوچستان میں حکومت بنائیں گے،بلاول بھٹو

کو ئٹہ (نیوزٹویو) بلوچستان سے مسلم لیگ ن کے دواہم رہمنا سابق وزیراعلی ثنا اللہ زہری اور سابق وفاقی وزیر لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ عبدالقادر بلوچ پیپلزپارٹی میں شامل ہو گئے ہیں جبکہ ان کے علاوہ مسلم لیگ ق کے رکن اور سابق صوبائی وزیر کرنل ریٹائرڈ یونس چنگیزی، نیشنل پارٹی کے رکن نواب محمد خان شاہوانی، مسلم لیگ ن کی کشور احمد جتک، سابق رکن بلوچستان اسمبلی، سردار چنگیز ساسولی، بلوچستان نیشنل پارٹی کے سردار عمران بنگلزئی نے بھی پیپلز پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا سیاسی رہنماؤں کی جانب سے پی پی پی میں شمولیت کی تقریب سے خطاب کرتے ہو ئے بلاول بھٹو نے کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی اور بلوچستان کے عوام کا رشتہ آج کا نہیں بلکہ تین تین نسلوں کا رشتہ ہے پیپلز پارٹی جانتی ہے کہ بلوچستان کے حقوق کو کیسے پورا کرنا ہےبلاول بھٹو نے پیشن گوئی کی کہ بلوچستان میں آئندہ حکومت پیپلز پا رٹی کی ہو گی ثناء اللہ زہری اور عبدالقادر بلوچ ہمارے ساتھ ہیں، ہم بلوچستان کے ہر ضلع میں پہنچیں گے۔ پیپلزپارٹی ہی واحد جماعت ہے جو بلوچستان اور لوگوں کے حقوق کا دفاع کر سکتی ہےہم پورے ملک میں اور بلوچستان میں پیپلزپارٹی کی حکومت بنائیں گے۔ عوام جان چکے ہیں کہ تبدیلی کا اصل چہرہ تاریخی مہنگائی، تاریخی بے روزگاری اور تاریخی غربت ہے

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اگر آپ لوگ ہمارا ساتھ دیں گے تو دنیا کی کوئی طاقت ہمارا راستہ نہیں روک سکتی ۔ ہم سب شانہ بشانہ رہے ہیں اور مل کر کام کریں گے۔ہم نے اس ملک کے غریب عوام کو آواز دی، غریب کسانوں کو زمین کا مالک بنایا اور مزدوروں کو بھی حقوق دلوائے تھے۔ بے نظیر بھٹو کی شہادت کے بعد آپ نے ایک بار پھر مردِحر صدر آصف علی زرداری کا ساتھ دیا تھا اور ہم نے تیسری دفعہ تاریخ رقم کی انہوں نے کہا کہ صوبوں کو وہ حقوق دلائے تھے، جن کا وعدہ قائد عوام نے کیا تھا مگر وہ وعدہ تو صدر زرداری کے دور میں پورا ہوا جب ہم نے صوبوں کو حقوق دلائے تھے، جب ہم نے این ایف سی ایوارڈ دلایا تھا، اٹھارویں ترمیم کے ذریعے آپ کو اپنے حقوق دلائے تھے اور آپ کو اپنے وسائل کا مالک بنایا تھا

اس موقع پر جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عبدالقادر بلوچ کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی کے قائدین نے ہمیں دلاسہ دیا۔ چیئرمین بلاول بھٹو جو کچھ دیکھ رہے ہیں وہ صرف ٹریلر ہے۔ کورونا کی وجہ سے محدود جلسہ کا انتظام کیا گیا انہوں نے کہاکہ ہماری سیاست شخصیات کے اردگرد رہی۔ ہم نے مسلم لیگ (ن) کو خیر آباد کہہ دیا ہے۔ مسلم لیگ (ن) بلوچستان میں اب کوئی قد آور شخصیت نہیں رہی۔ پیپلز پارٹی نے اپنی قابلیت سے آج بلوچستان میں پوزیشن بنائی۔ اس موقع پر اپنے خطاب میں سابق وزیراعلیٰ بلوچستان نواب ثناء اللہ زہری نے بھی باقاعدہ پیپلز پارٹی میں شمولیت کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف نے ہمیں عزت دینے کا وعدہ کیا، مگر ہمیں عزت دینے کا وعدہ پورانہیں کیا نواز شریف نے ہماری بے عزتی کی، ان سے وفا کی توقع نہیں، ہم نے انھیں بار بار موقع دے کر مضبوط کرنے کی کوششیں کی لیکن ان کی فطرت میں ہی وفا نہیں ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں