سپریم کورٹ نے18سال بعداغوابرائےتاوان کے3ملزمان کو شک کا فائدہ دے کربری کردیا

اسلام آباد(نیوزٹویو) سپریم کورٹ نےاغواء برائے تاوان کے تین ملزمان کو 18 سال بعدرہا کر دیا ہے عدالت نے ملزمان عبدالوہاب، ظہیر احمد اور وارث علی کو شک کا فائدہ دیکر بری کیا ہے ملزمان کے وکیل نے عدالت میں دلا ئل دیتے ہو ئے موقف اختیار کیا کہ ملزمان کی جیل میں شناخت پریڈ نہیں کی گئی مدعی نے عدالت میں ملزمان کو شناخت کیاعدالت میں ملزمان کی شناخت کی قانونی حیثیت نہیں ملزمان پر لاہور سے آٹھ سال بچے معید کو تاوان کیلئے 2005 میں اغواء کا الزام تھاانسداد دہشتگردی عدالت نے 5 ملزمان کو عمر قید کی سزا سنائی تھی لاہور ہائی کورٹ نے اپیل میں دو ملزمان رضوان اور اشفاق کو بری کر دیا تھا جبکہ ہائیکورٹ نے تین ملزمان وہاب، ظہیر اور وارث کی عمر قید برقرار رکھی تھی  جنھیں اب سپریم کورٹ نے شک کا فائدہ دے کر رہا کر دیا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں