وزارت داخلہ کا دوہرے پاسپورٹ رکھنےوالوں کے لیےایمنسٹی سکیم لا نے کا فیصلہ

اسلام آباد(نیوزٹویو) وفاقی وزارت داخلہ نے ایک سے زیادہ پاسپورٹ رکھنے والوں کے لیے ایمنسٹی سکیم دینےکا فیصلہ کیا ہےایمنسٹی سکیم کے تحت ایک سے زیادہ پاسپورٹ رکھنے والے نوے روزکے اندراپنا پا سپورٹ منسوخ کرا سکیں گے سکیم سے فائدہ نہ اٹھا نے والوں کے کیسز ایف آئی اے کو بیھجے جا ئیں گے سکیم کی حتمی منظوری کابینہ دے گی وزارت داخلہ میں وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید کی زیرصدارت ایمنسٹی سکیم سے متعلق اجلاس ہوا اجلاس میں سیکرٹری داخلہ یوسف نسیم کھوکھر اور ڈی جی پاسپورٹ ڈاکٹر نعیم رؤف شریک ہوئے، اجلاس میں دہرے پاسپورٹ درخواستوں اور زائد پاسپورٹ رکھنے والوں کو اضافی پاسپورٹ منسوخ کرانے کیلئے ایمنسٹی دینے کا فیصلہ کیا گیاایمنسٹی سکیم کے لئے مختلف تجاویز پر غور کیا گیا اور اہم فیصلے کر لئے گئے، اجلاس میں بریفنگ دی گئی کہ وزارت داخلہ کو دہرے پاسپورٹ کی 1629 درخواستیں موصول ہوچکی ہیں، جو پالیسی نہ ہونے کی وجہ سے التوا کا شکار ہیں۔ ایمنسٹی کے حوالے سے حتمی منظوری وفاقی کابینہ سے لی جائے گی۔ وزیرداخلہ نے ڈی جی پاسپورٹ اینڈ امیگریشن کو سمری تیار کرنے کی ہدایت کی وزارت داخلہ نے کہا کہ درخواست گزاروں کو صرف ایک پاسپورٹ رکھنے کی اجازت ہوگی۔ اجلاس میں وزیرداخلہ کو بتایا گیا کہ ایک سے زائد پاسپورٹ منسوخ کرانے کیلئے 90 روز کی مہلت دی جائے گی۔ ایمنسٹی اسکیم سے فائدہ نہ اٹھانے والوں کے کیسز ایف آئی اے کو بھیجے جائیں گے۔وزارت داخلہ کے مطابق موجودہ قانون میں ایک سے زائد پاسپورٹ رکھنے والوں کی سزا کم از کم تین سال کی جیل ہے،ایمنسٹی سکیم سے ایک سے زائد ناموں والے پاسپورٹ رکھنے والے اوورسیز پاکستانیوں کو فائدہ ہوگا، ماضی میں چھ ایمنسٹی سکیموں کے ذریعے 12 ہزار پاسپورٹ کی کلیرنس کی جا چکی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں