پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس ملتوی کرنے پر غور

اسلام آباد(نیوزٹویو)حکومت نےپارلیمنٹ کے 13 ستمبر کو ہونے والے مشترکہ اجلاس کو ملتوی کرنے پر غور شروع کردیاہے اجلاس 20ستمبر کو بلا ئے جانے کا امکان ہے اس حوالے سے کنٹونمنٹ بورڈکے انتخابات اور اراکین کی بڑی تعداد کورونا وائرس میں مبتلا ہونے کو جواز بنایا جا رہا ہےپارلیمانی ذرائع کے مطابق پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس تیرہ ستمبر کو نہ ہونے کا امکان ہے جبکہ یا د رہے کہ صحافتی تنظیموں وکلاء اور سول سوسائٹی نے پارلیمنٹ کے باہر مشترکہ اجلاس کے موقع پر دھرنا دینے کا اعلان کر رکھا ہےدھرنا متنازعہ پاکستان میڈیا ڈویلپمنٹ اتھارٹی بل کے خلاف دیا جا رہا ہے صدر عارف علوی نے ابھی تک تیرہ ستمبر کے اجلاس کے سمن جاری نہیں کیےحکومت نے سپیکر سے مشاورت کے بعد تیرہ ستمبر کو مشترکہ اجلاس بلانے کا اعلان کیا تھا قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کو بھی ایوان صدر کی سمری کا انتظار  ہے جبکہ زرائع کے مطابق کئی اراکین بیرون ملک ہیں اس لیے مشترکہ اجلاس بیس ستمبر تک ملتوی کر دیا جائے گا,قومی اسمبلی سیکریٹریٹ اجلاس کی تیاریاں مکمل کرچکا ہے قومی اسمبلی سیکرٹریٹ زرائع کے مطابق صدر کی طرف سے سمن ملتے ہی اجلاس کا نوٹیفکیشن جاری کردیا جاے گا مشترکہ اجلاس سے صدر عارف علوی نے خطاب کرنا ہےصدر کے خطاب کے ساتھ ہی چوتھا پارلیمانی سال شروع ہوگا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں