سچن ٹنڈولکر اور انیل امبانی سمیت 300 بھارتی شہریوں کے نام پنڈورا پیپرز میں شامل۔

اسلام آباد (نیوزٹویو) پنڈورا پیپرز میں آف شور کمپنیاں رکھنے والی شخصیات میں بھارت کے سابق کرکٹر سچن ٹنڈولکر کا نام بھی  شامل ہے۔اس حوالے سے سچن ٹنڈولکر کے وکیل کا کہنا ہے کہ سرمایہ کاری جائز ہے۔ جس کی تفصیلات ٹیکس حکام کو فراہم کردی گئی ہیں۔پنڈورا پیپرز میں 300 بھارتی شہریوں جبکہ 700 پاکستانی شخصیات کے نام سامنے آئے ہیں۔بھارت کے معروف تاجر انیل امبانی کے نام پر 18 آف شور کمپنیاں رجسٹرڈ ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔پنڈورا پیپرز کی دستاویزات کے تجزیے سے پتہ ظاہر ہوتا ہے کہ لندن میں آف شور کمپنیوں کے ذریعے جائیدادیں خریدنے والوں میں پاکستانی پانچویں نمبر پر ہیں۔خیال رہےکہ پنڈورا پیپرز ایک کروڑ 19 لاکھ فائلوں پر مشتمل ہیں اور تحقیقات میں دنیا کے 117 ملکوں کے 150 میڈيا اداروں کے 600 سے زائد رپورٹرز نے حصہ لیا ہے، صحافتی دنیا کی سب سے بڑی تحقیقات میں پاکستان سے دی نیوز کے عمر چیمہ اور فخر درانی شریک ہوئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں