پاکستان کسٹمز نے کراچی ائیر پور ٹ سے 0.616ملین یوروز کی فارن کرنسی سمگلنگ ناکام بنا دی

کراچی (نیوزٹویو) پاکستان کسٹمز نے کراچی ائیر پور ٹ سے 0.616ملین یوروز کی فارن کرنسی سمگلنگ کو ناکام بنا دیا منی لانڈرنگ اور کرنسی سمگلنگ کے خلاف آپریشنز جاری رکھتے ہوئے پاکستان کسمٹز (ایف بی آر) نے ائیر پورٹ سیکیورٹی فورس کےساتھ مل کر مشترکہ آپریشن میں دو مسافروں سے 616000 یوروز  فارن کرنسی (پاکستانی 120 ملین روپے )  ضبط کرلی۔کرنسی سمگلنگ میں ملوث دونوں مسافر عبید صدیقی ولد محمد افضل اور اقصیٰ صدیقی دختر محمد افضل  جو کہ بھائی بہن ہیں  ، کو جناح انٹرنیشنل ائیرپورٹ کراچی  سے گرفتار کیا گیا جو کہ فلائیٹ ای کے 605 کے ذریعے کراچی سے دبئی سفر کر رہے تھے۔ دونوں مسافروں کے خلاف ایف آئی آر درج کر لی گئی ہے ۔ تفتیش کے بعد مزید گرفتاریاں متوقع ہیں۔

وفاقی وزیر خزانہ و ریونیو شوکت ترین نے اس کامیابی پر اور منی لانڈرنگ اور کرنسی سمگلنگ کے خلاف ایف بی آر کےجاری آپریشنز کی تعریف کی ہے۔  چئیرمین ایف بی آر/سیکریٹری ریونیو ڈویثرن ڈاکٹر محمد اشفاق احمد نے  کامیاب آپریشن پر ممبر کسٹمز آپریشنز ،ایف بی آرطارق ہدا  کو مبارک با د دی اوراوراس بڑی منی لانڈرنگ  کو بے نقاب کرنےکے   آپریشن میں شامل کسٹمز اہلکاروں کے لئے نقد انعامات اور تعریفی اسناد کا اعلان کیا۔ایف بی آر منی لانڈرنگ اور کرنسی سمگلنگ کے خلاف زیرو ٹالرنس پالیسی پر گامزن ہے اور اس سلسلے میں پالیسی اور آپریشنل سطح پر متعدد اخترائی اقدامات متعارف کر چکا ہے تا کہ ملک بھر میں ٹیکس قوانین کی تعمیل کے کلچر کو فروغ دیا جا سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں