اتحادی حکومت تحریک انصاف کی حکومت میں کیے گئے وعدوں پر عمل کرے،آئی ایم ایف کا دوٹوک موقف

اسلام آباد(نیوزٹویو) عالمی مالیاتی ادارے آئی ایم ایف نے دوٹوک موقف اپناتے ہو ئے اتحادی حکومت سے تحریک انصا ف کے دورحکومت میں کیے گئے فیصلوں پرعملدرآمد کامطالبہ کردیا  اور کہا ہے کہ پیٹرول اور بجلی پر سبسڈی ختم کرنے کے وعدے پر عمل کیا جا ئے ہےتفصیلات کے مطابق قطر کے دارالحکومت دوحہ میں پاکستان اورآئی ایم ایف کے درمیان اہم مذاکرات ہوئے، عالمی مالیاتی ادارے نے دوٹوک موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ کسی نگران حکومت سے پروگرام پر مذاکرات ہوں گے نہ آرڈیننس کے ذریعے پروگرام پر عمل درآمد چاہتے ہیں، گزشتہ حکومت کے کیے گئے وعدوں پر بھی عملدرآمد کیا جائے۔ آئی ایم ایف حکام نے کہا ہے کہ پاکستان جنوری 2022 میں طے شدہ ایکشن پلان پر عملدرآمد کرے عمران حکومت میں پارلیمنٹ کے منظور شدہ روڈ میپ پر عمل درآمد چاہتے ہیں۔ حکومت پاکستان نے یقین دہانی کرائی تھی کہ پٹرول پر لیوی 30 روپے فی لٹرکی جائے گی جبکہ بجلی بھی 3 روپے 94 پیسے فی یونٹ مہنگی کی جائےگی۔ واضح رہے کہ حکومت کی یقین دہانی پر ہی رواں سال فروری میں عالمی مالیاتی ادارے نے حکومت کو ایک ارب ڈالر دیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں