پیٹرول ڈیزل کی قیمتیں برقرار،ٹیکس گوشواروں میں15دن کی توسیع

اسلام آباد(نیوزٹویو) وفاقی حکومت نے مٹی کے تیل اور لائٹ ڈیزل کی قیمتوں میں بالترتیب 10 روپے اور 7 روپے 50 پیسے کمی کرتے ہوئے پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں برقرار رکھنے کافیصلہ کیا ہے جبکہ ٹیکس گوشوارے جمع کرانے کی تاریخ میں مزید پندرہ روز کا اضافہ کر دیا گیا ہےاسلام آباد میں میڈیا بریفنگ میں وفاقی وزیر خزانہ اسحٰق ڈار نے کہا کہ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں تبدیلی نہیں ہوگی اور اگلے 15 دن تک موجودہ قیمت 235 روپے 30 پیسے رہے گی جو تقریباً 2 ماہ سے برقرار ہے۔

انہوں نے کہا کہ پیٹرول کی قیمت اس وقت قیمت 224 روپے 80 پیسے فی لیٹر ہے، اس میں بھی کوئی تبدیلی نہیں ہوگی اور اسی طرح برقرار رہے گی جبکہ یکم دسمبر سے 15 دسمبر تک پیٹرول اور ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں کوئی تبدیلی نہیں ہوگی۔

انہوں نےکہا کہ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ مٹی کے تیل میں 10 روپے فی لیٹر کم کی جائے گی کیونکہ سردیاں شروع ہوچکی ہیں اور یہ کم ترین آمدنی والے افراد دیہاتوں اور دور دراز علاقوں میں لوگ استعمال کرتے ہیں، اسی لیے وزیراعظم کی رہنمائی میں قیمت میں کمی کا فیصلہ کیا گیا ہے۔مٹی کے تیل کی نئی قیمت 181 روپے 83 پیسے فی لیٹر ہوجائے گی۔لائٹ ڈیزل کی قیمت 186 روپے 50 پیسے ہے جس میں 7 روپے 50 پیسے کمی کردی گئی ہے اور نئی قیمت 179 روپے ہوجائے گی۔ان کا کہنا تھا کہ ان قیمتوں کا اطلاق رات 12 بجے سے ہوگا۔

وفاقی وزیر خزانہ نے کہا کہ ٹیکس ریٹرنز فائل کرنے کے لیے آج 30 نومبر تک جمع کرنے کی آخری تاریخ تھی لیکن ایف بی آر کو کاروباری برادری اور سیلاب سے متاثرہ علاقوں سے بھی مطالبہ کیا گیا ہے 15 دن کی مزید توسیع کی جائے۔اس لیےٹیکس ریٹرنز جمع کرانے کے لیے 15 دن کا اضافہ کردیا گیا اور 15 دسمبر تک ٹیکس ریٹرنز جمع کرادیے جائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں